Sada E Waqt

چیف ایڈیٹر۔۔۔۔ڈاکٹر شرف الدین اعظمی۔۔ ایڈیٹر۔۔۔۔۔۔ مولانا سراج ہاشمی۔

Breaking

متفرق

Saturday, March 16, 2019

جنتا دل سیکولر کے جنرل سکریٹری کنور دانش علی ہاتھی پر سوار۔۔۔۔۔۔امروہہ سے ہو سکتے ہیں بی ایس پی کے امیدوار۔


دہلی/17مارچ/صداۓوقت
. . . . . . . . . . . . . . . . . . . . . . . . . . . 
سابق وزیراعظم دیوگوڑاکےمعتمداورجنتادل سیکولرکےجنرل سکریٹری کنوردانش علی نےمایاوتی کی سیاسی سربراہی کوتسلیم کرتےہوۓہاتھی کی سواری کوترجیح دی اورجنتادل کوالوداع کہدیا!
کنوردانش علی کرناٹک کےوزیراعلیٰ کمارسوامی کےدست راس تھے،کانگریس کےساتھ حکومت تشکیل دۓجانےمیں ان کاکلیدی کردارتھا۔بلکہ یوں کہیۓکہ کانگریس قیادت سےرابطہ کرنااورسوامی کووزیراعلیٰ بنانےمیں انھوں نےاپنی سیاسی مہارت کاثبوت دیا۔لیکن سوامی حکومت میں کنوردانش کوشامل نہ کۓجانےسےوہ ناراض چل رہےتھے،یوپی میں سپاہی/بسپااتحادکودیکھتےہوۓکنورنےہاتھی کی طرف قدم بڑھایااورمایاوتی نےان کاکھلےدل  سےسواگت کرتےہوۓپارٹی کی رکنیت ستیش چندمشرا کےہاتھوں دلادی اورامکان ہےکہ امروہہ سےوہ بسپاکےپارلیمانی سیٹ سےامیدوارہوں گے۔مایاوتی کوایک عرصےسےنسیم الدین صدیقی کی جگہ ایک مسلم چہرہ کی تلاش تھی آج انھوں نےوہ چہرہ کنوردانش علی کی شکل میں ڈھونڈلیا۔
کنوردانش کےجنتادل سےعلیحدگی سیاسی اعتبارسےبڑی اہمیت کاحامل ہے،سوامی کماراوردیوگوڑانےابھی کوٸ ردعمل ظاہرنہیں کیالیکن ذراٸع کےبموجب کنورکی جداٸ سوامی کوراس نہیں آرہی ہے۔

Post Top Ad

Your Ad Spot