Sada E Waqt

چیف ایڈیٹر۔۔۔۔ڈاکٹر شرف الدین اعظمی۔۔ ایڈیٹر۔۔۔۔۔۔ مولانا سراج ہاشمی۔

Breaking

متفرق

Thursday, August 23, 2018

کلدیپ نیر نہیں رہے۔

اردو صحافت کا ایک اہم ستارہ ڈوب گیا۔۔
. . . . . . . . . . . . . . . . . . . . . . . . . . 
آزداد ہندوستان کے اہم ستون و مایہ ناز صحافی،تجزیہ نگار۔۔مشہور کالم نگار،مصنف،
سماجی کار پرداز و سیاست داں کلدیپ نیر کا آج 95 برس کی عمر میں ایک قلیل علالت کے سبب دہلی کے ایک اسپتال میں انتقال ہو گیا۔اطلاع کے مطابق 22/23 اگست کی شب میں 12۔30 بجے انھوں نے آخری سانس لی۔ کل دوپہر میں ان کی آخری رسومات ادا کی جائے گی۔
کلدیپ نیر کی پیدائش 1923 میں پاکستان کے شہر سیالکوٹ میں ہوئی تھی۔انھوں نے اپنا صحافتی کیرئر کا آغاز دہلی کے اردو روزنامہ" انجام" سے کیا تھا۔بعد ازاں انھیں دہلی کے شام نامے "وحدت" میں مولانا حسرت موہانی کی سر پرستی میں کام کرنے کا موقع ملا۔انھوں نے گاندھی جی کے قتل کی رپورٹنگ بھی کی تھی۔
کلدیپ نیر ایک محب اردو۔۔محب وطن اور کئی کتابوں کے مصنف بھی تھے۔گزشتہ دنوں ان کی ایک آپ بیتی (آٹوبایو گرافی) " ایک زندگی نا کافی" اردو میں شائع ہوئی تھی۔وہ اردو اور ایگریزی کے مایہ ناز صحافی تھے۔1972 میں پٹنہ میں منعقدہ کل ہند اردو ایڈیٹر کانفرنس کا اجلاس انھیں کی صدارت میں ہوا تھا۔وہ سابق  ہائی کمشنر آف انڈیا برائے انگلینڈ بھی رہ چکے ہیں۔انھیں راجیہ سبھا کا ممبر بھی نامزد کیا گیا تھا۔
صدائے وقت اس موقع پر غمزدہ کنبہ سے تعزیت و ہمدردی کا اظہار کرتا ہے۔۔
. . . . . . . . . . . . . . . . . . . . . . . . . 
ڈاکٹر شرف الدین اعظمی۔۔مدیر.  صدائے وقت۔

Post Top Ad

Your Ad Spot