Sada E Waqt

چیف ایڈیٹر۔۔۔۔ڈاکٹر شرف الدین اعظمی۔۔ ایڈیٹر۔۔۔۔۔۔ مولانا سراج ہاشمی۔

Breaking

متفرق

Tuesday, March 3, 2020

کیجریوال نے بی جے پی کے سامنے گھٹنے ٹیک دئے‘.....کانگریس۔

نٸی دہلی/صداٸے وقت / ذراٸع / ٣ مارچ ٢٠٢٠۔
============================== 
کانگریس نے وزیر اعظم نریندر مودی اور دہلی کے وزیر اعلیٰ اروند کیجریوال کے درمیان منگل کے روز ہونے والی ملاقات کو ہدف تنقید بناتے ہوئے کہا کہ دونوں رہنماؤں کے درمیان ہونے والی میٹنگ کے بعد کیجریوال کے بیان سے واضح ہوتا ہے کہ انہوں نے بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے سامنے گھٹنے ٹیک دیئے ہیں اور یہ راز جلد از جلدفاش ہونا چاہئے۔
کانگریس کے ترجمان ابھیشیک منو سنگھوی نے آج یہاں پارلیمنٹ ہاؤس کے احاطے میں پریس کانفرنس میں کہا کہ مودی سے ملاقات کے بعد کیجریوال مسرورتھے ،یہ افسوسناک اور تعجب خیز صورتحال تھی۔ یہ ایک طرح کا راز تھا جس سے واضح ہوتا ہے کہ کیجریوال نے گھٹنے ٹیک دیئے ہیں اور ان کی بدلی ہوئی صورتحال کی حقیقت سب کے سامنے آنی چاہئے۔
انہوں نے کہا کہ یہ تعجب کی بات ہے کہ مودی سے ملاقات کے دوران وزیر اعلیٰ نے دہلی فسادات کے دوران 50 افراد کے اموات کے سلسلے میں کوئی بات نہیں کی ۔ انہوں نے مودی سے یہ بھی نہیں پوچھا کہ جو لوگ نفرت پھیلا رہے تھے ان کے خلاف کیا کارروائی کی جا رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ دونوں رہنماؤں کے درمیان دوستی کا یہ نیا رنگ حیران کن ہے۔
کانگریس کے ترجمان نے کہا کہ کیجریوال جب مودی سے ملاقات کرکے تو اس طرح کا پیغام دے رہے تھے جیسے بی جے پی کا وزیر اعلیٰ اپنے اعلیٰ کمان کو کلین چٹ دے رہا ہو۔ انہوں نے کہا کہ عام آدمی پارٹی(اے اےپی) مکمل طور پر بی جے پی کی بی ٹیم کے طور پر کام کر رہی ہے۔ غور طلب ہے کہ کیجریوال نے آج پارلیمنٹ ہاؤس میں مودی سے ملاقات کی اور دہلی کی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا۔ کیجریوال نے اس ملاقات کو رسمی ملاقات قرار دیا ۔
اس سے پہلے سنگھوی نے کہا کہ دہلی فسادات کے سلسلے میں پارلیمنٹ میں بحث کروانے کے معاملے میں حکومت کا رخ عجیب وغریب ہے۔ حکومت کہتی ہے کہ وہ اس معاملے پر ہولی کے بعد یا حالات معمول پرہوجانے کے بعد بحث کروائے گی، انہوں نے سوال کیا کہ حکومت کو بتانا چاہئے کہ کیا صورتحال ابھی حسب معمول نہیں ہوئی ہے۔

Post Top Ad

Your Ad Spot