Sada E Waqt

چیف ایڈیٹر۔۔۔۔ڈاکٹر شرف الدین اعظمی۔۔ ایڈیٹر۔۔۔۔۔۔ مولانا سراج ہاشمی۔

Breaking

متفرق

Tuesday, April 7, 2020

سعودی عرب نے حج پر آنے والے تمام مسلمانوں سے حج 2020 کے معطل کرنے کی اپیل۔!

ذراٸع ابلاغ میں شاٸع  خبر کے مطابق سعودی عرب میں کورونا وائرس کا بحران بھی گہرا ہوتا جارہا ہے۔وہاں کے وزیر صحت نے تشویش کا اظہار کیا ہے کہ آئندہ چند ہفتوں میں کورونا وائرس کے انفیکشن کی تعداد 2 لاکھ سے تجاوز کر سکتی ہے۔ موجودہ صورتحال کی سنگینی کو سمجھتے ہوئے ، حکومت نے پوری دنیا کے مسلمانوں سے حج کی تیاریوں کو ملتوی کرنے کی اپیل کردی ہے۔آپ کو بتادیں کہ اس ماہ کے شروع میں سعودی عرب نے ان کے شہروں میں کورونا وائرس پھیلنے کے خوف کے سبب "عمرہ" معطل کردیا تھا۔ اس اقدام کے بعد ، سالانہ حج سے متعلق غیر یقینی صورتحال پیدا ہوگئی ہے۔
واضح ہو کہ اس وقت دنیا میں اب تک 75 ہزار سے زیادہ افراد اپنی جانیں گنوا چکے ہیں۔جبکہ اس سے 13 لاکھ سے زیادہ افراد متاثر ہیں۔ اس وائرس کی وجہ سے ہلاکتوں کی سب سے زیادہ تعداد اٹلی میں ہوئی ہے،جس کے بعد اسپین میں لوگوں نے سب سے زیادہ جانیں گنوا دی ہیں۔ امریکہ تیسرے نمبر پر ہے ، جہاں پیر کی صبح ہلاکتوں کی تعداد 10 ہزار کو عبور کر گئی۔ وہیں اٹلی میں 16 ہزار سے زیادہ اور اسپین میں 13 ہزار سے زیادہ اموات ہوچکی ہیں۔ پوری دنیا میں 75 ہزار سے زیادہ اموات ورلڈ اوائیمٹرز ڈاٹ انفارو کی رپورٹ کے ذریعہ دی گئیں۔

سعودی عرب کے وزیر حج محمد بنتین نے کہا کہ سعودی عرب حج اور عمرہ کی خواہش مند لوگوں کے استقبال کے لئے پوری طرح تیار ہے،لیکن موجودہ صورتحال میں سعودی عرب اس عالمی وبا کے پیش نظر مسلمانوں اور اس کے شہریوں کی صحت کے تحفظ کے لئے پرعزم ہے۔چنانچہ ہم نے تمام ممالک کے اپنے مسلمان بھائیوں سے کہا ہے کہ وہ اس وقت تک حج کا انتظار کریں جب تک کہ حالات ٹھیک نہ ہوں۔

آپ کو بتادیں کہ آج سعودی عرب میں کورونا وائرس کے مریضوں کے بارے میںسعودی وزارت صحت کے ترجمان ڈاکٹر محمد العبدالعالی نے کہا ہے کہ گذشتہ 24 گھنٹے کے دوران مملکت میں کورونا وائرس کے مزید 272 مریضوں کی تصدیق ہوئی ہے۔ترجمان صحت نے یومیہ بنیاد پر منعقد ہونے والی پریس کانفرنس میں کہا کہ مزید مریضوں میں ’کووڈ 19‘ کی تصدیق کے بعد سعودی عرب میں مجموعی مریضوں کی تعداد 2795 تک پہنچ چکی ہے۔

Post Top Ad

Your Ad Spot