Sada E Waqt

چیف ایڈیٹر۔۔۔۔ڈاکٹر شرف الدین اعظمی۔۔ ایڈیٹر۔۔۔۔۔۔ مولانا سراج ہاشمی۔

Breaking

متفرق

Sunday, May 3, 2020

ڈاکٹر ‏محمد ‏خالد ‏کو ‏لاٸسنسنگ ‏اتھارٹی ‏(یونانی).مقرر ‏کٸے ‏جانے ‏پر ‏مبارکباد۔۔


اپنی ذمے داریوں کے تئیں دیانتدار ی اور لگن کے لیے مشہور خالد صاحب یونانی ادویہ کا اعتما د عوام کےدلوںضرور بٹھائیں گے:
  ڈاکٹر نازش احتشام۔

نئی دہلی/صداٸے وقت /  (پریس ریلیز)۔/ ٣ مٸی ٢٠٢٠۔
==============================

آئین ہند کےڈرگس اینڈ کاسمیٹکس رول 152 مجوزہ ڈرگس اینڈ کاسمیٹکس صنعت کاری ایکٹ 1940 (23 آف 1940)کے تحت حکومت دہلی میں بطوراسسٹنٹ ڈرگ کنٹرولر(یونانی) اور ان کےکلیگ ڈاکٹر وجے کمار اسسٹنٹ ڈرگ کنٹرولر (آیورویدک ) کومذکورہ بالا ایکٹ کے تحت لائسنسنگ اتھاریٹی کی اہم ذمے داری تفویض کی گئی ہے۔ اسی طرح آیورویدک کے ڈاکٹر وجے کمار کوبھی اسی عہدے پر فائز کیا گیا ہے۔ یقیناً یہ اہم ذمے داری ڈاکٹر محمد خالد کو ان کی سابقہ خدمات اور ذمے داریوں کے تئیں ان کی محنت و لگن وایثار کی بنیاد پر ہی تفویض کی گئی ہے۔ ڈاکٹر محمد خالدکو ملنے والی اس ترقی پر خوشی کا اظہار کرتے ہوئے اصلاحی ہیلتھ کیئر فاؤ نڈیشن کے جنرل سکریٹری حکیم نازش احتشام اعظمی نے ادارہ کی جانب سے انہیں پرخلو ص مبارکباد پیش کی ہے۔خیال رہے کہ وزارت صحت وخاندانی بہبود حکومت دہلی نے کافی غور خوض اور محکمہ کے ماہرین سے صلاح مشورہ کے بعد  لائسنسنگ اتھاریٹی جیسے بڑےمنصب کے لیے ڈاکٹر محمد خالد کا انتخاب کیا ہے۔

ایک پریس ریلیز میں حکیم نازش احتشام اعظمی نے بتایا کہ ڈاکٹر محمد خالد ایک لائق و فائق ، محنتی اور اپنی ذمے داریوں کے تئیں ایمانداری اور مستعدی کے لیےطبی حلقہ میں احترام کی نظروں سے دیکھے جاتے ہیں۔ڈاکٹر محمد خالد کا شماران کے میدان کے محنتی و ماہرین افسران میں ہوتا ہے۔انہوں نے علی گڑھ مسلم یونیورسٹی سے امتیازی حیثیت سے بی یو ایم ایس پاس کیا اور اس کے بعد ڈاکٹر این ٹی آر یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنس سے ملحقہ نظامیہ طبی کالج حیدرآباد سے ایم ڈی (یونانی) کی سند حاصل کی ہے۔ 
واضح رہے کہ آیور ویدک اور یونانی میڈیسن کے لئے ڈرگ کنٹرول سیل 1975 میں قائم ہوا تھا۔ اس  اہم شعبہ کوڈپارٹمنٹ آف ماڈرن میڈیسن فنکشننگ انڈر ڈائریکٹوریٹ آف ہیلتھ سروس، دہلی انتظامیہ نے تشکیل دیاتھا۔اور 1975 سے ہی اسی شعبہ کے ذریعے آیورویدک اور یونانی دواسازی کے لائسنس فراہم کئے جاتے رہے ہیں۔بعد ازاں ڈائریکٹوریٹ آف انڈین سسٹم آف میڈیسن اینڈ ہومیو پیتھی (اب ڈائریکٹوریٹ آف آیوش) کے تحت حکومت دہلی کے زیر انتظام 1996 سے یہ ادارہ فعادل اور سرگرم عمل ہے۔ فی الحال اسی ادارہ کے ذریعہ لائسنسنگ کا کام بھی انجام دیا جارہاتھا، جسے اب باضابطہ طور علیحدہ لائسنسنگ کے لئے تشکیل دیا گیا ہے۔ اس منصب پر ڈاکٹر محمد خالد کو فائز کئے جانے سےطب یونانی کے حلقے میں ہر طرف خوشی ومسرت کا اظہار کیا جارہا ہے۔حکیم نازش احتشام اعظمی نے مبارک باد دیتے ہوئے اس اعتما د کا اظہار کیا ہے کہ ڈاکٹر محمد خالد کے اس منصب پر فائز ہونے سے یونانی ادویہ سازی میں شفافیت اور اس کے معیار میں مزید بہتری آئے گی، جس سے اس کےتابناک ماضی سے یونانی کا رشتہ استوار کرنے اور مریضوں کااعتماد یونانی ادویہ کی طرف بحال کرنے میں مدد ملے گی۔

Post Top Ad

Your Ad Spot