Sada E Waqt

چیف ایڈیٹر۔۔۔۔ڈاکٹر شرف الدین اعظمی۔۔ ایڈیٹر۔۔۔۔۔۔ مولانا سراج ہاشمی۔

Breaking

متفرق

Saturday, April 27, 2019

دو چیزیں ہیں۔۔1۔ مسلم نمائندگی۔۔۔۔2۔ مسلمانوں کی نمائندگی۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔محمود دریا بادی کا تجزیہ/ تبصرہ۔

صدائے وقت۔/ از محمود دریا آبادی۔
. . . . . . . . . . . . . . . . . . . . . . . . . . 
دونوں میں عام طور پر ہم لوگ فرق نہیں کرپاتے، ہمارے نزدیک دونوں الگ الگ چیزیں ہیں ـ اکثر دیکھا گیا ہے کہ ہمارے مسلم نمائندے پارلیامنٹ وغیرہ میں مسلمانوں کی مناسب  نمائندگی نہیں کرپاتے، اس کی متعدد وجوہات ہوسکتی ہیں جن پر ابھی بحث کا موقع نہیں ہے ـ اس کے برعکس یہ بھی دیکھا گیا ہے بلکہ اکثر دیکھا گیا ہے کہ بہت سے غیر مسلم ممبران مسلمانوں کے مسائل پر بہت عمدہ نمائندگی کرتے ہیں، ابھی حال میں طلاق بل کے موقع پر اس کا مظاہرہ ہوچکا ہے ـ
   اس لئےالیکشن کے موقع پر ہمیں اپنا نمائندہ چننے سے پہلے اس پر ضرور غور کرلینا چاہیئے کہ ایوان میں ہمارے مسائل پر کون بہتر اور موثر نمائندگی کرسکتا ہے ـ بہتر تو یہ ہوتا کہ ایسا مسلم نمائندہ چنا جائے جو مسلمانوں کی نمائندگی کرنے پر بھی پوری طرح قادر ہو ـ ورنہ اگر کوئی غیر مسلم ہماری بہتر نمائندگی کرسکتا ہے تو اس کو ترجیح دی جانی چاہیئے ـ
  یہ بات صرف کنھیا یا تنویرحسن کے پس منظر میں نہیں بلکہ پورے ملک کی صورت حال کو سامنے رکھ کر عرض کی جارہی ہے ـ
         
           

Post Top Ad

Your Ad Spot