Sada E Waqt

چیف ایڈیٹر۔۔۔۔ڈاکٹر شرف الدین اعظمی۔۔ ایڈیٹر۔۔۔۔۔۔ مولانا سراج ہاشمی۔

Breaking

متفرق

Wednesday, January 22, 2020

دہلی میں بی جے پی کا مکمل صفایا سب سے بڑا احتجاج ہوگا۔

از/ زین شمسی/ صداٸے وقت ۔
==============================
دہلی میں احتجاج اپنی بلندیوں پر ہے اور سرکار اور اس کا پورا نظام اس احتجاج کی لہر کو کمزور کرنے کی تدبیریں تلاش کر رہی ہے۔
الیکشن بالکل قریب ہے۔ سرکار اسی احتجاج کو کسی ایسے موڑ پر لے جانا چاہے گی کہ اس سے کیجریوال حکومت کو نقصان ہو اور بی جے پی تین سیٹ سے آگے نکل جاٸے۔

بی جے پی جو بھی کرتی ہے سب الیکشن کے لٸے کرتی ہے۔ عوام جٸے یا مرے اسے صرف گدی چاہٸے۔ اس لٸے احتجاجیوں کا ایک احتجاج یہ بھی ہونا چاہٸے کہ دہلی الیکشن میں بی جے پی صفر پر آٶٹ ہو جاٸے۔ اگر ایسا ہو گیا تو بی جے پی منہ پٹک پٹک کر مر جاٸے گی۔
کیجریوال کے علاوہ کسی متبادل پر غور کرنا فضول ہے۔ کانگریس تھوڑی سی بھی مضبوط ہوتی تو سوچا جا سکتا تھا۔ عام آدمی پارٹی کے عوامی فیصلے اب تک بہتر رہے ہیں۔ کچھ لوگ این آر سی اور سی اے اے پر اروند کیجریوال کا عوامی موقف جاننے کے لٸے انہیں دھرنا اسٹیج پر دیکھنا چاہتے ہیں اور اس کے لٸے ان کی مخالفت بھی کر رہے ہیں۔ لیکن یہ دھرنا سیاسی لیڈروں کا نہیں عوام کا ہے۔ اگر کپیجریوال آتے تو دوسرے بھی آتے۔ اور دھرنا ختم ہو جاتا۔ کیجریوال نے بل کی مخالفت میں جو بات کہی وہی باتیں واٸرل ہوٸیں اور اس نے مخالفت کو شدت دی۔
اس لٸے کچھ سوچنا نہیں ہے۔ دہلی سے بی جے پی کا مکمل صفایا سب سے بڑا احتجاج ہوگا۔      زين شمسى

Post Top Ad

Your Ad Spot