Sada E Waqt

چیف ایڈیٹر۔۔۔۔ڈاکٹر شرف الدین اعظمی۔۔ ایڈیٹر۔۔۔۔۔۔ مولانا سراج ہاشمی۔

Breaking

متفرق

Wednesday, April 1, 2020

کورونا وائرس بحران کے دوران سعودی عرب نے حج 2020 کے منصوبوں پر دیا بیان...ابھی حتمیٰ تیاری نہ کریں ۔ابھی انتظار کریں۔

صداٸے وقت /ذراٸع / ١ اپریل ٢٠٢٠۔
==============================
ریاض۔ سعودی عرب نے کورونا وائرس کی وبا  کے پیش نظر رواں سال حج کے منصوبوں سے متعلق ایک بڑا بیان دیا ہے۔ سعودی عرب نے منگل کے روز دنیا بھر کے مسلمانوں سے کہا ہے کہ ابھی حج کی منصوبہ بندی نہ کریں اور کورونا وائرس (کووڈ۔ 19) پر دنیا بھر میں صورت حال مزید واضح ہو جانے کا انتظار کریں۔
الجزیرہ میں چھپی خبر کے مطابق ، سعودی عرب کی حکومت میں حج اور عمرہ کے وزیر محمد صالح بنٹے نے ایک ٹی وی انٹرویو میں لوگوں سے اس سال حج کے منصوبے ابھی سے نہ بنانے کی اپیل کی ہے۔ اس سے قبل ، یہاں سال بھر چلنے والے عمرہ کو گزشتہ ماہ سے ہی بند کر دیا گیا ہے۔ اس کے علاوہ ، دو ہفتہ قبل کورونا کے پیش نظر یہاں مساجد میں نماز ادا کرنے یا دیگر اجتماعی مذہبی پروگراموں پر بھی فی الحال پابندی عائد ہے۔
صالح نے سرکاری ٹی وی چینل الخبریہ سے بات چیت میں دعوی کیا کہ سعودی عرب عمرہ اور حج کے لئے آنے والے عازمین کے لئے پوری طرح تیار ہے ، لیکن دنیا بھر میں بڑھتے ہوئے کورونا کیسز تشویشناک ہیں۔ ہم پوری دنیا میں پھیلی ایک وبا کے بارے میں بات کر رہے ہیں۔ ہم دنیا بھر میں موجود اپنے مسلمان بھائیوں اور بہنوں کی صحت کو لے کر فکرمند ہیں۔ لہذا ، میں سب سے اپیل کرنا چاہتا ہوں کہ وہ ابھی سے حج کی منصوبہ بندی نہ کریں ، جب تک پوری دنیا میں صورتحال واضح نہ ہو جائے اس وقت تک انتظار کریں۔
بتا دیں کہ سعودی عرب کی معیشت کا ایک بہت بڑا حصہ حج اور عمرہ کے لئے آنے والے عازمین پر بھی منحصر ہے۔ کورونا کے پیش نظر سعودی نے فی الحال شہر مکہ اور مدینہ منورہ میں نقل و حرکت پر سخت پابندی عائد کردی ہے۔ نیز ، تمام بین الاقوامی پروازیں بھی گذشتہ ہفتے سے بند ہیں۔ اس سے قبل ایبولا کے دوران سعودی نے ایبولا پھیلانے والے ممالک سے حج عازمین کی آمد پر پابندی عائد کردی تھی۔ اب تک سعودی عرب میں کورونا انفیکشن کے 1563 واقعات سامنے آ چکے ہیں جبکہ 10 افراد کی موت ہوگئی ہے۔

Post Top Ad

Your Ad Spot