Sada E Waqt

چیف ایڈیٹر۔۔۔۔ڈاکٹر شرف الدین اعظمی۔۔ ایڈیٹر۔۔۔۔۔۔ مولانا سراج ہاشمی۔

Breaking

متفرق

Sunday, November 3, 2019

جونپور۔۔حضرت حمزہ چشتی کا 544 واں عرس۔۔شان و شوکت سے منایا گیا۔

جون پور...اتر پردیش۔ (نماٸندہ صداٸے وقت۔)۔
=========================
حضرت حمزہ چشتی ؒ کا544واں سالانہ عرس اتوار کے روز شہر کے وشیشر پور واقع درگاہ میں پوری عقیدت و احترام کے ساتھ منایا گیا۔اس دوران ضلع کے سبھی سماجی و سیاسی لوگوں کے علاوہ سینکڑوں کی تعداد میں عقیدت مندوں نے درگاہ میں پہنچ کر منتیں مانگی۔

عرس کا آغاز تلاوت کلام پاک سے ہوا جس کے بعد جلسہ میلاد النبیؐ کا انعقاد کیا گیا۔جلسہ کو خطاب کرتے ہوئے مولانا حسام الدین احمد جعفری مہتمم مدرسہ حنفیہ نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اللہ نے اپنے دین کو عوام تک پہنچانے کیلئے پیغمبر،نبی اور اولیاء کو دنیا میں بھیجا جن کی تعلیم سے ہی انسان اپنے رب کو پہچان سکا اور حقیقت سے روبرو ہوا۔انھوں نے کہا کہ اللہ کے رسولؐ نے انسان کو عبادت کا جو طریقہ سکھایا اسی کے دم پر لوگ اپنی آخرت کو کامیاب بنا سکتے ہیں۔اس سے قبل مونالا ندیم رضا،احمد رضا جونپوری،مولانا قیام الدین،مولانا شمس الدین نے نعت نبیؐ کا نظرانہ پیش کیا۔بعد جلسہ قدیمی روایت کے مطابق سینٹ پیٹرک اسکول کے سامنے سے جلوس کے ساتھ چادر اٹھائی گئی جس کے ہمراہ فن سپاہ گری کے اکھاڑے کے ساتھ مزار شریف پر پہنچی جہاں صاحب سجادہ کے ساتھ چادر و گلپوشی کیا گیا اور عقیدت مندوں نے چادر پوشی و دعا شروع کی۔ملک کی سالمیت کو مضبوط کرنے کیلئے روایتی طریقے سے قومی یکجہتی کانفرنس کا آغاز شروع کیا گیا جس میں ممبر پارلیمنٹ شیام سنگھ یادو،نگر پالیکا کے سابق چیرمین دنیش ٹنڈن،سابق ایم ایل اے حاجی افضال احمد،پنڈت اودھیش چترویدی،ارشد قریشی،سنجے جنڈوانی،نوین سنگھ،نیاز احمد سمیت دیگر لوگوں نے قومی یکجہتی پر اپنے خیالات کا اظہار کیا۔درگاہ کمیٹی کے صدر محمد شبیر قریشی نے بتایا کہ یہ درگاہ یکجہتی کی مثال ہے۔اس درگاہ پر ضلع کے علاوہ دیگر ریاستوں سے بھی زایرئن آتے ہیں اور اپنی منتیں مانگتے ہیں۔عرس میں نظم و نسق برقرار رکھنے کیلئے پولیس انتظامیہ تعینات رہی۔اس موقع پر شمشیر قریشی،نسیم احمد،سمیر حسن خاں،نوین سنگھ،سنجے جنڈوانی،وشال کھتری،شمیم احمد،انل استھانہ،نسیم قریشی،شکیل منصوری سمیت دیگر لوگ موجود رہے۔آئے ہوئے لوگوں کا حیر مقدم ارشد قریشی و پروگرام کی نظامت سنجیو کمار یادو نے کیا۔

Post Top Ad

Your Ad Spot