Sada E Waqt

چیف ایڈیٹر۔۔۔۔ڈاکٹر شرف الدین اعظمی۔۔ ایڈیٹر۔۔۔۔۔۔ مولانا سراج ہاشمی۔

Breaking

متفرق

Tuesday, December 17, 2019

دہلی کے جعفرآباد میں پرتشدد احتجاج ، گاڑیوں میں توڑپھوڑ ، کئی میٹرو اسٹیشن بند۔

شہریت ترمیمی قانون کی مخالفت میں ملک بھر میں پرتشدد احتجاج ہورہا ہے ۔ دہلی میں احتجاج دھیرے دھیرے شدت اختیار کرتا جارہا ہے۔
نٸی دہلی/ صداٸے وقت/ ذراٸع/ 17 دسمبر 2019.
==============================
شہریت ترمیمی قانون کی مخالفت میں ملک بھر میں پرتشدد احتجاج ہورہا ہے ۔ دہلی میں احتجاج دھیرے دھیرے شدت اختیار کرتا جارہا ہے ۔ جامعہ نگر میں احتجاج اور تشدد کے واقعات کے بعد اب منگل کو دہلی کے جعفرآباد میں مظاہرہ کیا گیا اور اس مظاہرہ نے بھی پرتشدد شکل اختیار کرلیا ۔ پولیس اور مظاہرین میں جھڑپ ہوئی اور کئی گاڑیوں میں بھی توڑ پھوڑ کی گئی ۔ پولیس نے بھیڑ پر قابو پانے کیلئے آنسوگیس کے گولے داغے ۔
پولیس نے حالات پر گہری نظر رکھنے اور کسی بھی ناخوشگوار صورتحال سے نمٹنے کیلئے ڈرون بھی منگوالئے ہیں ۔ دہلی پولیس کے کئی اعلی افسران جائے واقعہ پر پہنچ گئے ہیں ۔ ساتھ ہی ساتھ علاقہ میں اضافی فورس کو تعینات کردیا گیا ہے ۔ بتایا جارہا ہے کہ اس دوران تین بسوں میں جم کر توڑپھوڑ کی گئی اور کئی دیگر گاڑیوں کو بھی نقصان پہنچایا گیا ۔
وہیں احتجاج کو شدت اختیار کرتا ہوا دیکھ کر سیلم پور سے جعفرآباد جانے والے راستہ کو بند کردیا گیا ہے ۔ پولیس نے ٹریفک کو پوری طرح سے روک دیا ہے ۔ بتایا جارہا ہے کہ 66 فٹ روڈ پر یہ تشدد بھڑکا اور کچھ مقامات پر آتش زنی کے واقعات بھی پیش آئے ، جس کے پیش نظر احتیاطا راستہ کو بند کردیا گیا ہے ۔
مشرقی دہلی میں سلیم پور اور جعفرآباد میں مظاہرے کے پیش نظر دہلی میٹرو ریل کارپوریشن نے کئی اسٹیشنوں کو بند کردیا ہے۔ دہلی میٹرو کے سرکاری ذرائع نے بتایا کہ دہلی پولیس سے ملی صلاح کے بعد سلیم پور، جعفرآباد، ویلکم، گوکل پوری، بابرپور، موجپور، جوہری پور اور شیو وہار میٹرو اسٹیشنوں پر لوگوں کے داخل ہونے اور باہر نکلنے پر روک ہے۔ ذرائع نے بتایا کہ احتیاط کے طورپر یہ قدم اٹھایا گیا ہے اور حالات معمول پر آنے کے بعد اسٹیشنوں کو عام مسافروں کےلئے کھول دیا جاٸے گا۔

Post Top Ad

Your Ad Spot