Sada E Waqt

چیف ایڈیٹر۔۔۔۔ڈاکٹر شرف الدین اعظمی۔۔ ایڈیٹر۔۔۔۔۔۔ مولانا سراج ہاشمی۔

Breaking

متفرق

Wednesday, July 22, 2020

اتر ‏پردیش ‏کے ‏وزیر ‏اعلیٰ ‏یوگی ‏آدیتہ ‏ناتھ ‏نے ‏عید ‏الاضحیٰ ‏کے ‏لٸیے ‏جاری ‏کٸے ‏رہنما ‏اصول ‏( ‏گاٸڈ ‏لاٸن ‏).

لکھنو۔۔اتر پردیش /صداٸے وقت /ذراٸع /٢٢ جولاٸی ٢٠٢٠۔
=============================
  عید الاضحیٰ  (2020)  کا تیوہار یکم اگست کو منایا جائے گا۔  کورونا وائرس کے پیش نظر ، اتر پردیش کے وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ  نے اس موقع  کے لئے ایک رہنما اصول جاری کیا ہے۔  حکومت نے تمام مذہبی مقامات کے لئے ہدایات جاری کی ہیں۔  رہنما خطوط کے مطابق کسی بھی مذہبی مقام پر ہجوم جمع کرنا ممنوع ہے۔   یوپی کے تمام اضلاع کے پولیس افسران کو بتایا گیا ہے کہ قربانی کے دوران گائے خاندان کی قربانی  سے پہلے بھی متعدد بار فرقہ وارانہ کشیدگی پیدا ہوچکی ہے۔  لہذا ، کسی قسم کے فرقہ وارانہ جذبات کو ٹھیس نہ پہنچانے کا خاص خیال رکھنا چاہئے۔
 ہدایت نامے میں کہا گیا ہے ، 'پولیس کو لوگوں کو معاشرتی فاصلے سے آگاہ کرنے کے لئے لاؤڈ اسپیکر کا استعمال کرنا چاہئے۔  سوشل میڈیا پر بھی نظر رکھیں۔  گمراہ کن معلومات پھیلانے والوں کے خلاف سخت کارروائی کی جائے۔  تھانہ کے انچارج  اور آفیسر کو چھوٹے سے چھوٹے واقعے کو سنجیدگی سے لینا چاہئے۔  اسی کے ساتھ ہی عید قرباں پر جانوروں کی قربانی پر  یہ بھی کہا گیا ہے کہ ممنوعہ جانوروں کی قربانی کی افواہوں سے علاقے میں تناؤ پیدا ہوسکتا ہے۔  پولیس افسران کو ہدایات دی گئی ہیں کہ اس بات کا خاص خیال رکھا جائے کہ اس بات کو یقینی بنایا جائے کہ کوئی افواہ نہ پھیلا۔۔گاٸڈ لاٸن کے اہم نکات ۔۔۔۔۔۔۔۔۔
 بھیڑ کا اجتماع روکنا۔یعنی  کسی بھی مذہبی مقام پر اجتماعی طور پر ہجوم جمع نہ کریں۔

   غیر مسلم علاقوں سے کھلی جگہوں پر کھلے طور پر قربانی کے گوشت کی نقل و حرکت پر پابندی عائد کریں۔

  قربانی کے دوران ممنوعہ جانور کی قربانی کولیکر اس  سے پہلے متعدد بار فرقہ وارانہ کشیدگی  ہوچکی ہے۔  لہذا اس معاملے پر خصوصی خیال رکھنا چاہئے۔

 لوگوں کو معاشرتی فاصلے سے آگاہ کرنے کے لئے پولیس لاؤڈ اسپیکر کا استعمال کریں۔

 پولیس سوشل میڈیا پر بھی نگاہ رکھیں۔  گمراہ کن معلومات پھیلانے والوں کے خلاف سخت کارروائی کی جائے۔  تھانہ انچارج  اور آفیسر کو سب سے چھوٹے واقعے کو سنجیدگی سے لینا چاہئے۔

 ڈرون کیمروں کا استعمال مخلوط اور حساس علاقوں کی نگرانی کے لئے کرنا چاہئے۔

  پولیس افسران کو ہدایت دی گئی ہے کہ کالعدم جانوروں کی قربانی کی افواہوں سے علاقے میں تناؤ پیدا ہوسکتا ہے۔  لہذا اس معاملے کا خاص خیال رکھیں۔


Post Top Ad

Your Ad Spot