Sada E Waqt

چیف ایڈیٹر۔۔۔۔ڈاکٹر شرف الدین اعظمی۔۔ ایڈیٹر۔۔۔۔۔۔ مولانا سراج ہاشمی۔

Breaking

متفرق

Tuesday, May 11, 2021

*#فلسطین_کے_غداروں_کو :* *اماراتی حسن سجوانی کا ذلت آمیز بیان*

از /سمیع اللہ خان /صدائے وقت. 
==============================
 اسوقت جبکہ امتِ اسلامیہ درد و کرب میں غرق ہے کیونکہ ابھی اسی وقت مسجدِ اقصیٰ کی حفاظت کرتے ہوئے فلسطینی مجاہدین کی لاشیں گر رہی ہیں، ذرا اس درد کی المناکی کا اندازہ لگائیے کہ درنده صفت اسرائیلی فوج نے عید سے محض ۲ دن قبل ۹ فلسطینی بچوں کو آج وحشیانہ بےرحمی سے شہید کردیا ہے، شہیدوں کی تعداد مزید ہے، جن میں اضافہ ہوتا جارہا ہے، ہمارے فلسطینی مسلمان آگ و خون اور بمباری میں گھرے ہوئے ہیں، جامِ شہادت نوش کررہےہیں، 
 دوسری طرف حرام خور اور دجال کا ناجائز بچہ اقوام متحدہ مذمتی قرارداد جار کر مزے لے رہاہے، یوروپین حقوق انسانی کے دوغلے علمبرداروں کے منہ میں دہی جم گیاہے، افغان طالبانوں کی اسلامی حکومت پر بمباری کرنے والا امریکا یہاں بھی اسرائیل کے شانہ بشانہ ہے،  سعودی عرب اپنے امریکی آقاؤں کی خدمت میں مصروف ہے، ہندوستان کے سبزی خور ہندو فلسطینی لاشوں کا جشن منا رہے ہیں، ایسا دلدوز منظرنامہ ہے کہ پورا وجود غمزدہ ہے، 
*عین اسی وقت میں متحدہ عرب امارات کا ایک حکومتی غلام ۔ حسن سجوانی بیان جاری کررہاہے کہ: آخر کیوں فلسطینی مظاہرین مسجد اقصیٰ کو خالی کرکے آسانی سے اپنے گھروں کی طرف واپس کیوں نہیں چلے جاتے؟ " یہ بیان جاری کرنے والا کوئی یہودی اسرائیلی یا امریکی نہیں ہے بلکہ یہ ایک عربی اماراتی حکومت کا ٹٹو، حسن سجوانی ہے*
 یہ درحقیقت فلسطین کی موجودہ زار و نزار صورتحال کے پسِ پردہ کارفرما حقائق ہیں ۔ اور وہ یہ کہ ممالک عربیہ کے حکمرانوں نے پہلے فلسطین کا سودا کیا، پھر عالمی دہشتگرد امریکہ کے باج گزار بن گئے ہیں، جن میں سب سے ننگے سوداگر اور اسرائیلی لابی کے غلام سعودی عرب کے آلِ سعود اور امارات کے آلِ نہیان ہیں ۔ یہی دونوں خاندان عالم اسلام کو اندر سے توڑنے اور انہیں بےاثر کرنے کے دجالی پیادے ہیں، فلسطین کو عالم اسلام کی عسکری امداد سے محروم کرکے مسلمانوں کے قبلہ اول کا سودا کرنے والے یہی لوگ ہیں، ان لوگوں کے دل کتنے سخت اور باطل کی غلامی سے لت ہت ہوچکےہیں کہ عین جس وقت فلسطین پر آگ و بم برسایا جارہاہے، انہیں قتل کیا جارہاہے ان لمحات میں بھی یہ منافقین فلسطینیوں کےخلاف ہی زہر اگل رہےہیں، یہ صرف فلسطین کے ہی نہیں پوری امت کے خائن ہیں، الله کے مجرم اور رسول اللہﷺ کے غدار ہیں،
میں کہتاہوں کہ، بحیثیت امت، ان سے اور ان کے حمایتیوں سے نفرت کیجیے جنہوں نے امت کی عظمت اور عزت کو ائمۃ الکفر کے ایوانوں میں فروخت کردیاہے، اور ان کے خلاف اپنی نفرت کا اظہار اور ردعمل اتنا عام کیجیے کہ انہیں یقین ہوجائے کہ اگر بغیر سیکوریٹی کے ہم عام مسلمانوں میں چلے جائیں تو یہ نعرے بلند ہوجائیں گے: " فلسطین کے غداروں کو : "

 سمیع اللّٰہ خان 

Post Top Ad

Your Ad Spot